اچھو 302 (فلم)

پاکستانی فلم

اچھو ٣٠٢ (انگریزی: Achhu 302) پنجابی زبان میں فلم کا آغاز کیا۔ فلم كى نمائش 14 جولائی، 1989ء كو ہوئى یہ پاکستانی، ایکشن اور موسیقی فلموں میں پائی جاتی ہیں۔ فلم کے ہدایتکار الطاف حسین تھے۔ فلمسازی کی تھی چوہدری محمد عارف۔ اس فلم کے گیتوں کے موسیقار ایم اشرف تھے۔ اس فلم میں گیت پاکستان کے مشہور و معروف گلوکاروں نور جہاں نے گائے۔ فلم کی لسٹ ریکارڈنگ میں شامل ایم ادریس انہوں نے گیتوں کی بہترین ریکارڈنگ کی اور شاعر وارث لدھیانوی، خواجہ پرویز کی طرف سے دھنیں بنے ہوئے تھے۔ [1]

اچھو ٣٠٢
ACHOO 302.jpg
Original titleAchoo 302
ہدایت کارالطاف حسین
پروڈیوسرچوہدری محمد عارف
تحریربشیر نیاز
ستارے
راویحسن عارف
موسیقیایم اشرف
ایم ارشد
سنیماگرافیپرویز خان
ایڈیٹرقصیر ضمیر
پروڈکشن
کمپنی
تقسیم کارفیموس ویڈیو (لندن)
تاریخ نمائش
دورانیہ
138 دقیقہ
ملکFlag of Pakistan.svg پاکستان
زبانپنجابی

کہانیترميم

نام محمد اشرف باپ مجھے پیار سے اچھو اور ماں مجھے شفقت سے اچھو صاحب کہا کرتی تھی۔ میری ماں کی خواہش تھی کہ میں بڑا افسر بن کر اپنی ماں کا سر فخر سے اونچا کروں۔ مگر معاشرے نے میرے ہاتھ سے کتابیں چھین کر میرے ہاتھوں میں ہتھکڑیاں پہنائیں مجھے عدالت کے کہٹرے میں کھڑا کیا۔ مصنف نے مجھ پر دفعہ ٣٠٢ لگائی۔ مگر میں پھانسی کے پھندے سے بچ گیا۔ میرا بچپن جوانی بنا جوانی آگ بنی اور جب میرے قدم جیل سے باہر آۓ تو جو دیکھتا یہی کہتا اچھو ٣٠٢ اور معاشرے سے میری یہی جنگ رہی کہ وہ مجھے اچھو صاحب کہے میرا انجام کیا ہوا۔ اس کیلے دیکھۓ عارف پروڈکشن کی رنگین فلم۔۔۔ بشیر نیاز۔۔۔ ویکیپیڈیا ترمیم ماخذ عاشق علی حجرہ شاہ مقیم۔

کاسٹترميم

حوالہ جاتترميم

  1. عاشق علی (4 اپریل 2019ء). "پاکستانی پنجابی فلم اچھو ٣٠٢ پوسٹر". یہ اصل کتابچہ آپ کو مکمل طور پر مکمل سائز کے ہائی ڈیجیٹل اسکین JPEG فائل کے طور پر دستیاب ہے جسے آپ کی ضرورت ہوتی ہے۔ آپ اسے پرنٹ کرسکتے ہیں یا استعمال کر سکتے ہیں تاہم آپ کو ضرورت ہے۔. 

بیرونی رابطہترميم