اورنگی ٹاؤن پاکستان کے صوبہ سندھ کے دار الحکومت کراچی ڈویژن کے ضلع اورنگی کے 3 ٹاؤنز میں سے ایک ٹاؤن ہے۔ اگست 2000ء میں بلدیاتی نظام متعارف کرائے جانے کے ساتھ ہی کراچی ڈویژن اور اس کے اضلاع کا خاتمہ کر کے کراچی شہری ضلعی حکومت کا قیام عمل میں لایا گیا۔ اس کے نتیجے میں شہر کو 18 قصبہ جات (ٹاؤنز) میں تقسیم کر دیا گیا جن میں اورنگی ٹاؤن بھی شامل تھا، بعد ازاں 11 جولائی 2011 کو سندھ حکومت نے ضلع کراچی غربی کو دوبارہ بحال کر دیا۔

اورنگی ٹاؤن
تاریخ تاسیس 14 اگست 2001  ویکی ڈیٹا پر (P571) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
 
نقشہ

انتظامی تقسیم
ملک پاکستان   ویکی ڈیٹا پر (P17) کی خاصیت میں تبدیلی کریں[1]
تقسیم اعلیٰ کراچی   ویکی ڈیٹا پر (P131) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
جغرافیائی خصوصیات
متناسقات 24°57′00″N 66°58′00″E / 24.95°N 66.966666666667°E / 24.95; 66.966666666667   ویکی ڈیٹا پر (P625) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
رقبہ
آبادی
کل آبادی
مزید معلومات
قابل ذکر
باضابطہ ویب سائٹ باضابطہ ویب سائٹ  ویکی ڈیٹا پر (P856) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
جیو رمز 1346988  ویکی ڈیٹا پر (P1566) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
Map

تاریخ

ترمیم

برصغیر پاک و ہند کی تقسیم کے بعد پاکستان کے 2 صوبے مشرقی پاکستان اور مغربی پاکستان تھے جن کا آپس میں فاصلہ تقریباً 1600 کلومیٹر تھا۔ پاک بھارت جنگ 1947 کے بعد موجودہ بھارتی ریاست بہار (بھارت) اور ریاست مغربی بنگال سے اردو بولنے والے مسلمان مشرقی پاکستان ہجرت کر گئے تھے۔

1971 میں جنگ آزادی بنگلہ دیش کے نتیجے میں مشرقی پاکستان آزاد ہوکر بنگلہ دیش بن گیا جہاں بنگالیوں اور اردو بولنے والوں میں فسادات شروع ہو گئے جس کے بعد مشرقی پاکستان سے بہت بڑی تعداد میں اردو بولنے والے ہجرت کرکے کراچی کے علاقے اورنگی ٹاؤن آئے اور اسے آباد کیا۔

زبان

اورنگی ٹاؤن کے مقامی افراد کا تعلق مہاجر قوم سے ہے۔ اور اکثریت بھی اردو بولنے والوں کی ہے، اس کے علاوہ بیشتر علاقوں میں پشتو اور ہندکو بھی بولی جاتی ہے۔

جغرافیہ

ترمیم

اورنگی ٹاؤن شہر کے شمال مغربی حصے میں واقع ایک انتہائی گنجان آباد قصبہ ہے۔ دعوٰیٰ کیا جاتا ہے کہ یہ ایشیا کی سب سے بڑی کچی آبادی (slum) ہے [حوالہ درکار]۔ 1998ء کی مردم شماری کے مطابق یہاں کی آبادی تقریباً 30لاکھ سے زائد ہے۔ اس کی سرحدیں مشرق میں نیو کراچی ٹاؤن، شمال مشرق میں گڈاپ، جنوب مشرق میں شمالی ناظم آباد ٹاؤن اور جنوب میں سائٹ ٹاؤن سے ملتی ہیں جبکہ شمال میں حب، بلوچستان اور جنوب مغرب میں بلدیہ ٹاؤن اور مغرب میں کیماڑی ٹاؤن واقع ہے۔

علاقے

ترمیم
  • الطاف نگر
  • گلشنِ بہار
  • چشتی نگر
  • خیرآباد
  • منصور نگر
  • رئیس امروہی
  • کربلا
  • گلشنِ ضیاء
  • مہاجر چوک
  • شاہراہ قدافی
  • 5 نمبر چورنگی
  • ڈبہ موڑ
  • بنارس ٹاؤن
  • سر سید کالونی
  • گلزار محمد کالونی
  • غازی آباد
  • عزیز آباد
  • ڈسکو موڑ
  • بلال کالونی
  • مومن آباد
  • فقیر کالونی
  • قطر موڑ
  • فرید کالونی
  • داتا نگر
  • رحیم شاہ کالونی
  • بلوچ گوٹھ
  • گبول کالونی
  • علی گڑھ کالونی
  • گلفام آباد
  • صادق آباد
  • محمد نگر
  • شمسی کالونی
  • ہریانہ کالونی
  • حنیف آباد
  • مجاہد آباد

انتظامیہ

ترمیم

2023ء میں اس قصبے کے ناظم حاجی محمد جمیل ضیاء (ڈائری) جبکہ ان کے نائب عفّان صغیر صدیقی ہیں۔ اسسٹنٹ کمشنر اورنگی ٹاؤن فاطمہ صائمہ احمد ہیں۔

انتظامی تقسیم

ترمیم

اورنگی ٹاؤن کل 13 یونین کونسلوں میں تقسیم ہے، آبادی بھی درج ہے بمطابق [2]

حوالہ جات

ترمیم
  1.    "صفحہ اورنگی ٹاؤن في GeoNames ID"۔ GeoNames ID۔ اخذ شدہ بتاریخ 17 جون 2024ء 
  2. شہری حکومت کراچی، نقشہ اورنگی ٹاؤن[مردہ ربط] مع یونین کونسل آبادی

بیرونی روابط

ترمیم