بین الاقوامی کبڈی فیڈریشن

بین الاقوامی کبڈی فیڈریشن یا انٹرنیشنل کبڈی فیڈریشن (International Kabaddi Federation) کبڈی کا عالمی ادارہ ہے۔[1] فیڈریشن 2004ء میں قائم ہوئی۔ 31 قومی کبڈی ایسوسی ایشن اس کی اراکین ہیں۔[2]

اراکینترميم

مندرجہ ذیل ممالک انٹرنیشنل کبڈی فیڈریشن کے رکن ہیں: [3]

ملک براعظم مخفف مردوں کی ٹیم خواتین کی ٹیم
  افغانستان ایشیا AFG  Y  N
  آسٹریلیا اوقیانوسیہ AUS  Y  N
  آسٹریا یورپ AUT
  بنگلادیش ایشیا BAN  Y  Y
  بھوٹان ایشیا BHU
  کمبوڈیا ایشیا CAM
  کینیڈا امریکا CAN  Y  Y
  فرانس یورپ FRA
  جرمنی یورپ GER  Y  N
  انگلستان یورپ ENG  Y  Y
  بھارت ایشیا IND  Y  Y
  انڈونیشیا ایشیا INDO  N  Y
  ایران ایشیا IRI  Y  Y
  اطالیہ یورپ ITA  Y  Y
  جاپان ایشیا JPN  Y  Y
  کرغیزستان ایشیا KYG  Y  N
  ملائیشیا ایشیا MAS  Y  Y
  مالدیپ ایشیا MDV
  نیپال ایشیا NEP  Y  Y
  ناروے یورپ NOR  Y  N
  سلطنت عمان ایشیا OMA
  پاکستان ایشیا PAK  Y  Y
  جنوبی کوریا ایشیا KOR  Y  Y
  ہسپانیہ یورپ ESP  Y  N
  سری لنکا ایشیا SRI  Y  Y
  سویڈن یورپ SWE
  چینی تائی پے ایشیا TPI  N  Y
  تھائی لینڈ ایشیا THA  Y  Y
  ترکمانستان ایشیا TUR  Y  Y
  ریاستہائے متحدہ امریکا USA  Y  Y
  ویسٹ انڈیز امریکا WI  Y  N

غیر رکن ممالک جن کی اپنی قومی ٹیم ہے:

ملک براعظم مردوں کی ٹیم خواتین کی ٹیم
  ارجنٹائن امریکا  Y  N
  چین ایشیا  Y  N
  ڈنمارک یورپ  Y  N
  کینیا افریقہ  Y  Y
  میکسیکو امریکا  N  Y
  نیوزی لینڈ اوقیانوسیہ  Y  Y
  سکاٹ لینڈ یورپ  Y  N
  سیرالیون افریقہ  Y  N
  ویت نام ایشیا  Y  N

موجودہ درجہ بندیترميم

بین الاقوامی کبڈی فیڈریشن کی درجہ بندی کے مطابق موجودہ بہترین دس ٹیمیں درج ذیل ہیں:

درجہ ٹیم پوائنٹ
1   بھارت 126
2   ایران 90
3   پاکستان 83
4   تھائی لینڈ 81
5   بنگلادیش 80
6   کینیا 75
7   پولینڈ 60
8   انگلستان 59
9   ریاستہائے متحدہ 51
10   جاپان 47

حوالہ جاتترميم

  1. Ming Li؛ Eric W. MacIntosh؛ Gonzalo A. Bravo (15 May 2011). International Sport Management. Human Kinetics 10%. صفحہ 183. ISBN 978-1-4504-2241-3. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 07 اگست 2013. 
  2. John Nauright؛ Charles Parrish (2012). Sports Around the World: History, Culture, and Practice. ABC-CLIO. صفحہ 228. ISBN 978-1-59884-300-2. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 07 اگست 2013. 
  3. "Member Countries". 16 جون 2011 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 19 دسمبر 2015.