ٹوئنٹی20 بین الاقوامی میں پاکستان کے ریکارڈز کی فہرست

یہ فہرست پاکستان کے ٹوئنٹی20 بین الاقوامی کرکٹ کے ریکارڈز کی ایک فہرست ہے ، یہ ریکارڈز ٹیم اور ٹوئنٹی20 انٹرنیشنل (ٹی20)کرکٹ میں انفرادی پرفارمنس پر مشتمل ہیں۔

تفصیلترميم

ہر زمرہ کے لئے سب سے بہترین پانچ سے سات ریکارڈز درج کیے گئے ہیں، سوائے "ٹیم کی جیت، ہار، ڈرا اور بہترین وکٹ پارٹنرشپ" کے۔ پانچویں مقام پر میچ برابری کے ریکارڈ بھی شامل فہرست ہیں۔

علامت مطلب
پلیئر فی الحال ٹی 20 آئی کرکٹ میں سرگرم ہے
موجودہ کپتان
* کھلاڑی ناٹ آؤٹ رہا یا شراکت داری قائم رہی
عالمی ریکارڈ
تاریخ ٹی 20 میچ کے آغاز کی تاریخ
اننگز کھیلی گئی اننگز کی تعداد
میچز کھیلے گئے میچز کی تعداد
مخالف پاکستان کس ٹیم کے خلاف کھیل رہا تھا
مدت دورانیہ جب کھلاڑی ٹی 20 آئی کرکٹ میں سرگرم تھا
پلیئر کھلاڑی ریکارڈ میں شامل تھا
مقام کرکٹ میدان جس میں میچ کھیلا گیا
آئی سی سی بین الاقوامی ٹوئنٹی/20 چیمپین شپ
مقام ٹیم میچ پوائنٹ ریٹینگ
1   پاکستان قومی کرکٹ ٹیم 26 7365 283
2   انگلستان قومی کرکٹ ٹیم 16 4253 266
3   جنوبی افریقا قومی کرکٹ ٹیم 16 4196 262
4   آسٹریلیا قومی کرکٹ ٹیم 21 5471 261
5   بھارت قومی کرکٹ ٹیم 28 7273 260
6   نیوزی لینڈ قومی کرکٹ ٹیم 16 4056 254
7   افغانستان قومی کرکٹ ٹیم 16 3849 241
8   سری لنکا قومی کرکٹ ٹیم 18 4093 227
9   ویسٹ انڈیز کرکٹ ٹیم 21 4747 226
10   بنگلہ دیش قومی کرکٹ ٹیم 16 3525 220
11     نیپال قومی کرکٹ ٹیم 8 1698 212
12   سکاٹ لینڈ قومی کرکٹ ٹیم 11 2185 199
13   زمبابوے قومی کرکٹ ٹیم 11 2110 192
14   نیدرلینڈز قومی کرکٹ ٹیم 11 2065 188
15   آئرلینڈ کرکٹ ٹیم 19 3455 182
16   متحدہ عرب امارات قومی کرکٹ ٹیم 14 2527 181
17   پاپوا نیو گنی قومی کرکٹ ٹیم 17 2920 172
18   سلطنت عمان قومی کرکٹ ٹیم 5 774 155
19   ہانگ کانگ قومی کرکٹ ٹیم 8 1213 152
20   نمیبیا قومی کرکٹ ٹیم 12 1729 144
21   قطر قومی کرکٹ ٹیم 11 1421 129
22   سعودی عرب قومی کرکٹ ٹیم 11 1331 121
23   سنگاپور قومی کرکٹ ٹیم 10 1181 118
24   جرسی کرکٹ ٹیم 16 1834 115
25   کینیڈا قومی کرکٹ ٹیم 8 887 111
26   اٹلی قومی کرکٹ ٹیم 12 1326 111
27   کویت قومی کرکٹ ٹیم 7 727 104
28   کینیا قومی کرکٹ ٹیم 12 1229 102
29   ڈنمارک قومی کرکٹ ٹیم 12 1215 101
30   جرمنی قومی کرکٹ ٹیم 18 1527 85
31   ریاستہائے متحدہ امریکہ قومی کرکٹ ٹیم 9 758 84
32   بوٹسوانا قومی کرکٹ ٹیم 14 1142 82
33   گھانا قومی کرکٹ ٹیم 10 773 71
34   یوگنڈا قومی کرکٹ ٹیم 14 1069 76
35   ملائیشیا قومی کرکٹ ٹیم 15 1129 75
36   آسٹریا قومی کرکٹ ٹیم 6 439 73
37   ناروے قومی کرکٹ ٹیم 10 709 87
38   نائجیریا قومی کرکٹ ٹیم 10 708 71
39   گوئےمیسی کرکٹ ٹیم 16 1127 70
40   سویڈن قومی کرکٹ ٹیم 8 465 58
41   تنزانیہ قومی کرکٹ ٹیم 6 334 56
42   لکسمبرگ قومی کرکٹ ٹیم 6 328 55
43   اسپین قومی کرکٹ ٹیم 9 479 53
44   فلپائن قومی کرکٹ ٹیم 9 433 48
45   فرانس قومی کرکٹ ٹیم 6 267 45
46   بیلیز قومی کرکٹ ٹیم 9 377 42
47   پیرو قومی کرکٹ ٹیم 9 356 40
48   بحرین قومی کرکٹ ٹیم 7 261 37
49   میکسیکو قومی کرکٹ ٹیم 12 426 36
50   فجی قومی کرکٹ ٹیم 6 210 35
51   سمووا قومی کرکٹ ٹیم 6 205 34
52   وانواتو قومی کرکٹ ٹیم 10 330 33
53   پاناما قومی کرکٹ ٹیم 9 291 32
54   بلجئیم قومی کرکٹ ٹیم 9 290 32
55   جاپان قومی کرکٹ ٹیم 10 317 32
56   کوسٹا ریکا قومی کرکٹ ٹیم 8 252 32
57   ارجنٹائن قومی کرکٹ ٹیم 12 370 31
58   ہنگری قومی کرکٹ ٹیم 6 180 30
59   موزمبیق قومی کرکٹ ٹیم 12 352 29
60   تھائی لینڈ قومی کرکٹ ٹیم 14 369 26
61   چلی قومی کرکٹ ٹیم 10 249 25
62   ملاوی قومی کرکٹ ٹیم 12 297 25
63   اسرائیل قومی کرکٹ ٹیم 7 173 25
64   بھوٹان قومی کرکٹ ٹیم 8 180 23
65   فن لینڈ قومی کرکٹ ٹیم 8 177 22
66   جنوبی کوریا قومی کرکٹ ٹیم 10 217 22
67   آئل_آف_مین 7 149 21
68   مالٹا 11 158 14
69   بلغاریہ 5 68 14
70   سیرا لیون 5 61 12
71   برازیل 9 108 12
72   مالدیپ 11 114 10
73   جمہوریہ چیک 10 91 9
74   سینٹ ہیلینا 12 109 9
75   جبرالٹر 8 35 4
76   میانمار 9 23 3
77   انڈونیشیا 7 3 0
78   چین 11 0 0
79   گیمبیا 6 0 0
80   سوازی لینڈ 6 0 0
81   روانڈا 6 0 0
82   لیسوتھو 6 0 0
Reference: ICC rankings for Tests, ODIs, Twenty20 & Women ICC page, 29 June 2019
"Matches" is the number of matches played in the 12-24 months since the May before last, plus half the number in the 24 months before that.

ٹیم ریکارڈترميم

میچز کھیلے گئے (کل)ترميم

میچز جیت ہار برابر بے نتیجہ جیت فیصد
190 117 64 2 5 64.05
آخری تجدید: 25 جون 2022[1]

نتیجہ خلاصہ (اپوزیشن کے خلاف)ترميم

پاکستان نے 190میچز کھیلے ہیں جن میں سے 117 فتوحات، 65 شکست، 2 ٹائی اور 5 کوئی نتیجہ نہیں ملا جس کی مجموعی جیت کا تناسب 64.05 ہے۔[2]

بالمقابل میچ جیتے ہارے برابر بے نتیجہ % جیت کا تناسب
مکمل رکن ممالک
  افغانستان 2 2 0 0 0 100.00
  آسٹریلیا 24 12 10 1 1 54.34
  بنگلادیش 15 13 2 0 0 86.66
  انگلستان 21 6 13 1 1 32.50
  بھارت 9 2 6 1 0 27.77
  آئرلینڈ 1 1 0 0 0 100.00
  نیوزی لینڈ 25 15 10 0 0 60.00
  جنوبی افریقا 21 11 10 0 0 52.38
  سری لنکا 21 13 8 0 0 61.90
  ویسٹ انڈیز 21 15 3 0 3 83.33
  زمبابوے 17 16 1 0 0 94.11
ایسوسی ایٹ رکن ممالک
  کینیڈا 1 1 0 0 0 100.00
آئی سی سی ورلڈ الیون 3 2 1 0 0 66.67
  کینیا 1 1 0 0 0 100.00
  نیدرلینڈز 1 1 0 0 0 100.00
  نمیبیا 1 1 0 0 0 100.00
  سکاٹ لینڈ 4 4 0 0 0 100.00
  متحدہ عرب امارات 1 1 0 0 0 100.00
مجموعہ 188 116 64 3 5 64.20
یہ شماریات   پاکستان بمقابلہ   ویسٹ انڈیز بمقام نیشنل کرکٹ اسٹیڈیم، کراچی، میں تیسرے ٹی/20 میچ 25 جون 2022. تک درست ہیں[3]

پہلی دو طرفہ ٹی20 بین الاقوامی سیریز میں جیتترميم

بالمقابل پہلی ہوم گراؤنڈ جیت کا سال پہلی بالمقابل ٹیم کے ہوم گراؤنڈ پر جیت کا سال
  افغانستان 2012 YTP
  آسٹریلیا 2009 -
  بنگلادیش 2007 2012
  انگلستان - 2006
  بھارت YTP -
  نیوزی لینڈ 2010 2018
  سکاٹ لینڈ YTP 2018
  جنوبی افریقا 2021 2012
  سری لنکا 2012 2009
  ویسٹ انڈیز 2016 2013
آئی سی سی ورلڈ الیون 2017 YTP
  زمبابوے 2015 2011
آخری تجدید: 15 فروری 2021[4]


ٹیم سکور ریکارڈترميم

سب سے زیادہ ٹیم کا مجموعہترميم

درجہ سکور بمقابلہ بمقام تاریخ
1 232/6   انگلستان ٹرینٹ برج، ناٹنگھم، انگلستان 16 جولائی 2021
2 208/3   ویسٹ انڈیز نیشنل اسٹیڈیم، کراچی، پاکستان 16 دسمبر 2021
3 205/1   جنوبی افریقا سنچورین پارک، سنچورین، جنوبی افریقہ 14 اپریل 2021
4 205/3   ویسٹ انڈیز نیشنل اسٹیڈیم، کراچی، پاکستان 2 اپریل 2018
5 204/4   سکاٹ لینڈ دی گرینج، ایڈنبرگ، سکاٹ لینڈ 12 جون 2018
آخری تجدید: 16 دسمبر 2021[5]

کم سے کم ٹیم کا مجموعہترميم

رینک اسکور مخالف مقام موسم
1 74 (1 9.1 اوور)   آسٹریلیا دبئی 10 ستمبر 2012
2 82 (17.5 اوور)   ویسٹ انڈیز ڈھاکہ 1 اپریل 2014
3 83 (17.3 اوور)   بھارت ڈھاکہ 27 فروری 2016
4 89 (18.4 اوور)   انگلستان کارڈف 7 ستمبر 2010
5 95 (17.4 اوور)   سری لنکا ہامبانتوتا 1 جون 2012
ماخذ: کرییکنفو . آخری اپ ڈیٹ: 27 فروری 2016

ایک اننگز میں سب سے زیادہ رنز دیےترميم

متحدہ عرب امارات میں سری لنکا کے خلاف 2013-14 کی ٹی20 انٹرنیشنل سیریز کے دوسرے ٹی20 انٹرنیشنل میں پاکستان نے اپنی سب سے بڑی اننگز 211/3 کے مجموعی اسکور کو تسلیم کی۔ [6]

درجہ سکور بمقابلہ بمقام تاریخ
1 211/3   سری لنکا دبئی انٹرنیشنل کرکٹ اسٹیڈیم، دبئی، متحدہ عرب امارات 13 دسمبر 2013
2 207/3   ویسٹ انڈیز نیشنل اسٹیڈیم، کراچی، پاکستان 16 دسمبر 2021
3 203/5   جنوبی افریقا سنچورین پارک، سنچورین، جنوبی افریقا 14 اپریل 2021
4 201   انگلستان ٹرینٹ برج، ناٹنگھم، انگلستان 16 جولائی 2021
5 200 ہیڈنگلے، لیڈز، انگلستان 18 جولائی 2021
آخری تجدید: 16 دسمبر 2021[7]

ایک اننگز میں کم سے کم رنز دیےترميم

اپریل 2018 میں پاکستان کے دورہ ویسٹ انڈیز کے پہلے ٹی ٹوئنٹی کے دوران پاکستان کی طرف سے پوری اننگز میں سب سے کم اسکور 60 ہے جب اس نے ویسٹ انڈیز کو آؤٹ کیا۔[8]

درجہ سکور بمقابلہ بمقام تاریخ
1 60/10   ویسٹ انڈیز نیشنل اسٹیڈیم، کراچی، پاکستان 1 اپریل 2018
2 80/10   نیوزی لینڈ لنکاسٹر پارک، کرائسٹ چرچ، نیوزی لینڈ 30 دسمبر 2010
3 82/10   سکاٹ لینڈ دی گرینج، ایڈن برگ، سکاٹ لینڈ 13 جون 2018
4 85/9   بنگلادیش شیر بنگلہ نیشنل کرکٹ اسٹیڈیم، میرپور تھانا، بنگلہ دیش 29 نومبر 2011
5 89/10   آسٹریلیا دبئی انٹرنیشنل کرکٹ اسٹیڈیم، دبئی، متحدہ عرب امارات 5 ستمبر 2012
شیخ زاید کرکٹ اسٹیڈیم، ابو ظہبی، متحدہ عرب امارات 24 اکتوبر 2018
آخری تجدید: 9 اگست 2020[9]

انفرادی ریکارڈترميم

انفرادی ریکارڈ (بیٹنگ)ترميم

سب سے زیادہ انفرادی سکورترميم

رینک رنز پلیئر مخالف مقام تاریخ
1 122 بابر اعظم   جنوبی افریقا سنچورین 14 اپریل 2021ء
2 111 * احمد شہزاد   بنگلادیش ڈھاکہ 30 مارچ 2014ء
3 104 * محمد رضوان   جنوبی افریقا لاہور 11 فروری 2021ء
4 99 * محمد حفیظ   زمبابوے ہیملٹن 20 دسمبر 2020ء
5 98 * احمد شہزاد   زمبابوے ہارئر 24 اگست 2013ء
6 97 * بابر اعظم   ویسٹ انڈیز کراچی 2 اپریل 2018ء
7 94 عمر اکمل   آسٹریلیا ڈھاکہ 23 مارچ 2014ء
8 91 فخر زمان زمان   آسٹریلیا ہارئر 8 جولائی 2018ء
9 90 بابر اعظم   جنوبی افریقا جوہانسبرگ 3 فروری 2019ء
ماخذ: کرییکنفو . آخری اپ ڈیٹ: 7 فروری 2022ء .

کیریئر میں سب سے زیادہ رنزترميم

رینک رنز اوسط پلیئر میچز مدت
1 2620 45.17 بابر اعظم 73 2016-تا حال
2 2514 26.46 محمد حفیظ 119 2006-تا 2021
3 2423 31.45 شعیب ملک 123 2006-تا حال
4 1690 26.00 عمر اکمل 84 2009-تا 2019
5 1639 51.21 محمد رضوان 55 2006-تا حال
6 1471 25.80 احمد شہزاد 59 2009-تا 2019
7 1،405 18.01 شاہد افریدی 98 2006-2016
8 1253 22.78 فخر زمان 64 2017-تا حال
ماخذ: کرییکنفو . آخری اپ ڈیٹ: 7 فروری 2022.

سب سے زیادہ سٹرائیک ریٹترميم

رینک سٹرائیک رنز پلیئر مدت
1 150.75 1،405 شاہد افریدی 2006-2016
2 136.13 500 عمران نذیر 2007 تا 2012
3 135.00 432 آصف علی (کرکٹ کھلاڑی) 2018 موجودہ
4 133.11 406 شرجیل خان 2013-2016
5 131.75 1253 فخر زمان زمان 2017 موجودہ
6 129.12 2620 بابر اعظم 2016 - موجودہ
7 128.95 1639 محمد رضوان 2015 موجودہ
8 128.48 406 حیدر علی 2020 - موجودہ
9 125.67 2423 شعیب ملک 2015 موجودہ
10 125.26 818 سرفراز احمد 2010 - 2020
ماخذ: کرییکنفو . آخری اپ ڈیٹ: 7 فروری 2022

سب سے زیادہ کیریئر اوسطترميم

ماخذ: کرییکنفو .آخری اپ ڈیٹ: 7 فروری 2022
اوسط. اننگز سکور کھلاڑی دورانیہ
51.21 44 1639 محمد رضوان 2016 موجودہ
45.17 68 2620 بابر اعظم 2016 موجودہ
37.52 34 788 مصباح الحق 2007-2012
31.46 110 2423 شعیب ملک 2006-تا حال
28.33 23 595 سلمان بٹ 2007-تا 2010
27.26 42 818 سرفراز احمد 2010-تا 2021
اہلیت: 20 اننگز

کیریئر سنچریاںترميم

رینک سنچریاں کھلاڑی مدت
1 1 بابر اعظم 2021 -
2 1 احمد شہزاد 2014 -
3 1 محمد رضوان 2021 -
ماخذ: [] . آخری اپ ڈیٹ: 10 جنوری 2016.

زیادہ سے زیادہ 50+ اسکورترميم

رینک ففٹیاں سکور کھلاڑی مدت
1 25 2620 بابر اعظم 2016 - موجودہ
2 14 2514 محمد حفیظ 2006-تا حال
3 14 1639 محمد رضوان 2015 - موجودہ
4 9 2423 شعیب ملک 2006-تا حال
5 8 1471 احمد شہزاد 2009-تا 2019
6 8 1377 عمر اکمل 2009-تا 2017
ماخذ: کرییکنفو . آخری اپ ڈیٹ: 7 فروری 2022.

زیادہ بار صفر پر آؤٹترميم

رینک صفر پر آؤٹ پلیئر مدت
1 10 عمر اکمل 2009-تا حال
2 8 شاہد افریدی 2006-2016
3 7 کامران اکمل 2006-تا حال
محمد حفیظ 2006-تا حال
4 6 عماد وسیم 2015-تا حال
عمر گل 2015-تا حال
5 4 فیمم اشرف 2017-تا حال
ماخذ: کرییکنفو . آخری اپ ڈیٹ: 07 فروری 2022

انفرادی ریکارڈ (بولنگ)ترميم

زیادہ کیریئر وکٹیںترميم

رینک وکٹ پلیئر میچز اوسط بہتریں باؤلنگ مدت
1 97 شاہد افریدی 98 24.35 4/11 2006-2016
2 85 عمر گل 60 16.97 5/6 2007-تا حال
سعید اجمل 64 17.83 4/19 2009-2015
3 73 شاداب خان 64 21.79 4/14 2017 تا حال
4 61 محمد حفیظ 119 22.75 4/10 2006 - تا حال
5 60 حسن علی (کرکٹر) 48 26.92 3/12 2007-تا حال
6 59 محمد عامر 48 21.40 4/13 2009 - تا حال
7 55 عماد وسیم 58 23.49 5/14 2015-تا حال
8 54 سہیل تنویر 57 26.92 3/12 2007-تا 2017
ماخذ: کرییکنفو . آخری اپ ڈیٹ: 7 فروری 2022.

بہترین بولنگ کے اعداد و شمارترميم

رینک وکٹ رنز پلیئر بمقابلہ گراؤنڈ تاریخ سکور کارڈ
1 5 6 عمر گل   نیوزی لینڈ لندن 13 جون 2009 T20I # 107
2 5 6 عمر گل   جنوبی افریقا سنچورین 3 مارچ 2013 T20I # 306
2 5 14 عماد وسیم   ویسٹ انڈیز دبئی 23 ستمبر 2016 T20I # 568
4 4 8 عمر گل   آسٹریلیا دبئی 7 مئی 2009 T20I # 89
5 4 10 محمد حفیظ   زمبابوے ہارئر 16 ستمبر 2011 T20I # 205
ماخذ: کرییکنفو . آخری اپ ڈیٹ: 8 جولائی 2018.

انفرادی ریکارڈ (دیگر)ترميم

زیادہ سے زیادہ کیچ پکڑےترميم

رینک کیچ پلیئر مدت
1 50 شعیب ملک 2006-تا حال
2 39 عمر اکمل 2009-تا حال
3 34 فخر زمان 2017-تا حال
4 34 بابر اعظم 2016-تا حال
5 30 شاہد افریدی 2006-2016
6 30 محمد حفیظ 2006-تا 2021
7 22 شاداب خان 2017-تا حال
ماخذ: کرییکنفو . آخری اپ ڈیٹ: 7 فروری 2022

کپتان کے طور پر جیت کی زیادہ اوسطترميم

پلیئر میچز جیتے ہارے برابر جیت٪
انضمام الحق 1 1 0 0 100.00
سرفراز احمد ♣ † 37 29 8 0 78.37
مصباح الحق 8 6 2 0 75.00
بابر اعظم 40 26 9 5 74.28
شعیب ملک 20 13 6 1 67.50
یونس خان 8 5 3 0 62.50
محمد حفیظ 29 17 11 1 60.34
شاہد افریدی 43 19 23 1 45.34
ماخذ: کرییکنفو . آخری اپ ڈیٹ: 7 فروری 2022

پارٹنرشپ ریکارڈترميم

ہر وکٹ کے لیے شراکت داریترميم

شراکت داری رنز کھلاڑی بمقابلہ مقام تاریخ
پہلی وکٹ 197 محمد رضوان † اور بابر اعظم   جنوبی افریقا سنچورین 14 اپریل 2021
پہلی وکٹ 142 مختار احمد اور احمد شہزاد   زمبابوے لاہور 22 مئی 2015
دوسری وکٹ 143 * احمد شہزاد اور محمد حفیظ   زمبابوے ہارئر 24 اگست 2013
تیسری وکٹ 105 محمد رضوان اور حیدر علی   ویسٹ انڈیز کراچی 13 دسمبر 2021
چوتھی وکٹ 114 * شعیب ملک اور عمر اکمل   متحدہ عرب امارات ڈھاکہ 29 فروری 2016
پانچویں وکٹ ♠ 119 * شعیب ملک اور مصباح الحق   آسٹریلیا جوہینبرگ 18 ستمبر 2007
چھٹی وکٹ 75 آصف علی (کرکٹ کھلاڑی) اور عماد وسیم   سری لنکا لاہور 07 اکتوبر 2019
ساتویں وکٹ 38 مصباح الحق اور یاسر عرفات   بھارت دربان 14 ستمبر 2007
8ویں وکٹ 58 عماد وسیم اور انور علی   سری لنکا کولمبو 1 اگست 2015
9ویں وکٹ ♠ 63 سہیل تنویر اور سعید اجمل   سری لنکا دبئی 13 دسمبر 2013
10ویں وکٹ ♠ 31 * واباب ریاض † اور شعیب اختر   نیوزی لینڈ آکلینڈ 26 دسمبر 2010
ماخذ: کرییکنفو . آخری اپ ڈیٹ: 7 فروری 2022

مزید دیکھیےترميم

حوالہ جاتترميم

  1. "ریکارڈز / # 20 آئی میچز / ٹیم ریکارڈز / نتائج کا خلاصہ". کرک انفو. اخذ شدہ بتاریخ 25 جون 2022. 
  2. "ریکارڈز / پاکستان / ٹی20 میچز / نتیجہ کا خلاصہ". کرک انفو. اخذ شدہ بتاریخ 16 دسمبر 2021. 
  3. "ریکارڈز / پاکستان / ٹی20 انٹرنیشنل میچز / سیریز کا خلاصہ". کرک انفو. اخذ شدہ بتاریخ 9 اگست 2020. 
  4. "پاکستان ٹی20 انٹرنیشنل ریکارڈز – اننگز کا سب سے زیادہ مجموعہ". کرک انفو. اخذ شدہ بتاریخ 9 اگست 2020. 
  5. "پاکستان ٹی20 انٹرنیشنل ریکارڈز - پاکستان کے خلاف اننگز کا سب سے زیادہ مجموعہ". کرک انفو. اخذ شدہ بتاریخ 9 اگست 2020. 
  6. "پاکستان ٹی20 انٹرنیشنل ریکارڈز - پاکستان کے خلاف سب سے کم ٹوٹل". کرک انفو. اخذ شدہ بتاریخ 9 اگست 2020.